ن لیگ کے قائد میاں نواز شریف کے سیکیورٹی گارڈ فرید نیموچی کیخلاف کیس ختم کردیا گیا

لندن( نیوز ڈیسک) برطانوی پولیس نے نواز شریف کے گارڈ کیخلاف حملے کے الزام کے حوالے سے تحقیقات ختم کردیں، سکیورٹی گارڈ فرید نیموچی کیخلاف پاکستان تحریک انصاف کے شایان علی نے پولیس کو حملہ کرنے کی شکایت کی تھی، ہاتھا پائی کا واقعہ رواں برس 2 اپریل کو اس وقت پیش آیا جب نواز شریف اپنے دفتر سے نکل رہے تھے۔پولیس نے چھ ماہ کی تفصیلی تحقیقات کے بعد کوئی ایکشن نہ لینے کا فیصلہ کیا۔سکیورٹی فراہم کرنے والی کمپنی کے مالک احسن ڈار نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ اس معاملے میں سیاست ملوث تھی، ان کی کوشش تھی کہ گارڈ چارج ہو یا کاشن ملے۔احسن ڈار نے مزید کہا کہ خدا کا شکر ہے پولیس کو اندازہ ہوگیا کہ حقیقت کیا ہے، مزید کارروائی نہ کرنے کے حوالے سے پولیس نے خط لکھ کر مطلع کیا ہے۔ان کا کہنا تھا کہ پی ٹی آئی کارکن شایان علی نے گارڈ کو مشتعل کرنے کی کوشش کی لیکن اس نے پیشہ ورانہ رویہ کا مظاہرہ کیا- نواز شریف کی حفاظت ہمارے سکیورٹی گارڈز کی اولین ترجیح تھی، دفاع میں گارڈ کو چوٹین بھی آئیں۔