غیر معمولی جرات و بہادری اور فرض شناسی کے مظاہرے پر عدیل حسین شہید کو ’’تمغہ شجاعت‘‘ دینے کا فیصلہ

اسلام آباد(نیوز ڈیسک)وفاقی وزیر داخلہ رانا ثناءاللہ نے کہا ہے کہ غیر معمولی جرات و بہادری اور فرض شناسی کے مظاہرے پر اسلام آباد پولیس کے ہیڈ کانسٹیبل عدیل حسین شہید کو ‘تمغہ شجاعت’ دینے کا فیصلہ کیا ہے، شہید عدیل حسین کی بیوہ کو اسلام آباد پولیس میں بھرتی کیا جائے گا،بیوہ کو فوری طور پر مکمل شہدا پیکج دے رہے ہیں،شہداء پیکج کے تحت ایک کروڑ 65 لاکھ نقد ادا کرنے کے علاوہ ایک پلاٹ بھی دیا جا رہا ہے ۔ جمعہ کی شام اپنے بیان میں وزیر داخلہ رانا ثنا اللہ خان نے کہا کہ عدیل حسین نے وفاقی دارالحکومت کو دہشت گردی کے بڑے حملے سے بچانے کی کوشش میں جام شہادت نوش کیا، عدیل حسین کی اس عظیم قربانی کا ریاستی سطح پر اعتراف کرتے ہوئے یہ اعزاز عطا کرنے کا فیصلہ ہوا۔ انہوں نے کہا کہ عدیل حسین شہید کی مدت ملازمت کی تکمیل تک پوری تنخواہ بھی بیوہ کو ادا کی جاتی رہے گی ، شہید کے بچوں کی تعلیم اور شادی کے اخراجات بھی سرکاری طور پر ادا کئے جائیں گے ،شہدا کی عزت وتکریم اور ان کے اہل خانہ کی دیکھ بھال ریاست کی ذمہ داری ہے۔