ایم کیو ایم دھڑوں کو ایک کرنے کا مشن آخری مرحلے میں داخل ، گورنر سندھ کی مصطفیٰ کمال سے ملاقات

کراچی (نیوز ڈیسک) ایم کیو ایم کے دھڑوں کو ایک کرنے کا مشن آخری مرحلے میں داخل ہوگیا ، گورنر سندھ کامران خان ٹیسوری کی (پی ایس پی ) پاک سرزمین پارٹی کے چیئرمین مصطفیٰ کمال ملاقات ،گورنر سندھ کامران ٹیسوری رات گئے پاکستان سرزمین پارٹی (پی ایس پی) کے مرکز پاکستان ہاؤس پہنچے، انہوں نے مصطفیٰ کمال، انیس قائمخانی اور دیگر رہنماؤں سے ملاقات کی۔جمعہ کو ملاقات کے بعد مشترکہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے گورنر سندھ کامران ٹیسوری نے کہا کہ کراچی سب کا دوست ہے، شہر میں پانی، بجلی، گیس نہیں تو ہم کیا کررہے ہیں، عہد کرلیں کہ جوکام ریاست نہ کرسکی وہ ہم خود ہی کریں گے،اس شہر کو مجرموں کا شہر کہا جارہا ہے، ہم سچے پاکستانی ہیں،75 سال سے اس کے لئے کچھ نہیں ہوا، کوئی اور مسیحانہیں آئیگا ہم نے خود ہی نیک نیتی سے کام کرنا ہوگا،تنقید چھوڑیں، اختلافات بھلائیں اور ہاتھ تھامیں، میں دل سے چاہتا ہوں کہ ہم سب اختلافات بھلا کر آگے بڑھیں، میں جس منصب پر ہوں وہاں سیاسی بات نہیں بلکہ اخلاقی بات کرسکتا ہوں۔اس موقع پر چئیرمین پی ایس پی سید مصطفٰی کمال نے کہا کہ ملک مشکل حالات سے گزررہا ہے، لوگ اچھی خبر سننا چاہتے ہیں، ہم لوگوں کی بھلائی کیلئے ملکر کام کرنے کیلئے تیار ہیں۔ واضح رہے کہ گورنر سندھ سے ملنے سے پہلے مصطفیٰ کمال کی وزیراعظم شہباز شریف سے بھی ملاقات ہوئی تھی۔ذرائع کے مطابق ایم کیوایم کے دھڑوں میں اتحاد کے معاملے پر ایک ہونے کی امید آخری مراحل میں ہے، انضمام کے بعد ڈاکٹر خالد مقبول صدیقی ایم کیوایم کے سربراہ، انیس قائمخانی ڈپٹی کنوینرتنظیمی کمیٹی، مصطفیٰ کمال ایڈمنسٹریشن اور بلدیاتی امور کو سنبھالیں گے،دوسری جانب گورنر سندھ کامران ٹیسوری جلد ایم کیوایم بحالی کمیٹی کے سربراہ ڈاکٹرفاروق ستار سے ملاقات کریں گے انہیں ڈپٹی کنوینراور سیاسی معاملات کی ذمہ داریاں سونپی جائیں گی۔